اللہ تعالی نے اپنے آپ کو قرآن میں 900 سے زیادہ مواقع پر “الربّ” کہا ہے

Date:

بی کیونیوز! اللہ تعالی نے اپنے آپ کو قرآن میں 900 سے زیادہ مواقع پر “الربّ” کہا ہے۔ رب صرف وہی ہے جو پوری تخلیق کا خیال رکھتا ہے وہ وہی ہے جس نے ہمیں پیدا کیا۔ جو ہمیں برقرار رکھتا ہے۔ جو روزِ اوّل سے تمام مخلوقات کو خدمتِ خلق کے کاموں کا سبق دیتا ہے جس میں تین اہم معنی ہیں پہلا اہم معنی رب، مالک، یا مالک بننا ہے۔ دوسرا اہم معنی یہ ہے کہ دیکھ بھال، فروغ، برقرار رکھنے، اور فراہم کرنے کے لۓ اور تیسرا بلند یا بلند کرنا ہے

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Share post:

spot_imgspot_img

Popular

More like this
Related

”جو لڑکی شوہر کے ہوتے ہوئے بھی غیر مردوں سے ناجائز تعلق رکھتی ہے“

کسی بھی عورت کے لئے ہرگز مناسب نہیں کہ...

جو عورت مرد کی ایک چیز چ و م لے

میاں بیوی میں سیکس کی شروعات ہمیشہ ہنسی مذاق...

ایک خط جو آپ کے لیے ہے

رابعہ میری بہت اچھی دوست ہے وہ ایک اولڈ...